شان ٹیٹ نے کرکٹ کو خیرباد کہہ دیا

انتظار فرمائیں۔۔۔

سابق آسٹریلوی تیز گیند باز شان ٹیٹ نے صرف 34 سال کی عمر میں بین الاقوامی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا ہے۔ دائیں ہاتھ کےفاسٹ بالر کرکٹ کیریئر 15 سالہ پر محیط رہا جس میں انہوں نے ٹیسٹ، ایک روزہ اور ٹی ٹوئنٹی میں آسٹریلیا کی نمائندگی کی۔ وہ اپنا آخری میچ آسٹریلیا میں جاری بگ بیش 2016-17 کے دوران ہوبارٹ ہوریکنز کی جانب سے سڈنی تھنڈر کے خلاف کھیلیں گے۔

پانچ سال تک بین الاقوامی کرکٹ سے باہر رہنے کے بعد شان ٹیٹ نے آخری مرتبہ گزشتہ سال بھارت کے خلاف ٹی ٹوئنٹی میچ میں آسٹریلیا کی نمائندگی کی تھی۔ اس سے قبل وہ 3 ٹیسٹ، 35 ایک روزہ اور 21 ٹی ٹوئنٹی مقابلوں میں قومی ٹیم کی جانب سے کھیل چکے ہیں۔

شان ٹیٹ نے کرکٹ آسٹریلیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ وہ مزید چند سال کرکٹ کھیلنا چاہتے تھے تاہم اب انہیں لگ رہا ہے کہ کرکٹ کو خیرباد کہنے کا وقت آ ہی گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ فیصلہ کافی مشکل تھا خاص کر ایک ایسے وقت میں کہ جب میری عمر صرف 34 سال ہے۔

شان ٹیٹ نے ایشیز 2005 میں انگلستان کے خلاف بین الاقوامی کیریئر کا آغاز کیا تھا۔ اپنی برق رفتار، اٹھتی اور لہراتی ہوئی گیند بازی کی مدد سے پہلی اننگز میں تین انگلش کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی۔ گو کہ بعد میں انہیں صرف دو مزید ٹیسٹ مقابلوں میں شرکت کا موقع مل سکا، لیکن ایک روزہ کیریئر میں انہیں کئی موقع ملے۔ ان میں سب سے زیادہ قابل ذکر عالمی کپ 2007 ہے کہ جس میں شان ٹیٹ نے 11 مقابلے کھیل کر 23 وکٹیں حاصل کیں۔ وہ اس عالمی کپ میں سب سے زیادہ وکٹیں لینے والے گیند بازوں میں دوسرے نمبر پر رہے۔ یوں ایک روزہ کرکٹ کے مجموعی کیریئر میں انہوں نے 23.56 کی اوسط سے 62 وکٹیں اپنے نام کیں جبکہ ان کا اسٹرائیک ریٹ 27.20 رہا۔

انہیں دنیا کے تیز ترین گیند بازوں میں سے ایک بھی قرار دیا جاتا ہے۔ سال 2010 میں انگلستان کے خلاف باؤلنگ کرتے ہوئے شان ٹیٹ نے 161.1 کلومیٹر فی گھںٹہ کی رفتار سے گیند پھینکی جو بین الاقوامی کرکٹ کی تیز ترین گیندوں میں سے ایک ہے۔ ان کی غیر معمولی رفتار نے جہاں کئی منفرد کارنامے انجام دیے وہیں انہیں مستقل مسائل نے بھی گھیرے رکھا جس کا نتیجہ کم عمری میں ریٹائرمنٹ کی صورت میں نکلا ہے۔

پاکستانی گیند باز عمر گل کی طرح شان ٹیٹ کو بھی ایک عرصے تک ٹی ٹوئنٹی کا ماہر گیند باز قرار دیا جاتا رہا ہے۔ انہوں نے 21 بین الاقوامی ٹی ٹوئنٹی مقابلوں میں صرف 28 وکٹیں حاصل کیں۔ گو کہ وہ کسی ٹی ٹوئنٹی مقابلے میں 5 وکٹیں حاصل نہ کرپائے تاہم 2 مرتبہ چار، چار وکٹیں ضرور اپنے نام کیں۔ علاوہ ازیں پاکستان سپر لیگ 2016 میں شان ٹیٹ نے پشاور زلمی کی نمائندگی کی اور 9 مقابلوں میں 10 وکٹیں اپنے نام کیں۔

loading ads...

Facebook Comments



POST A COMMENT.