ذہنی صلاحیت میں اضافہ کے مشورے

انتظار فرمائیں۔۔۔

کھانے پینے کی ایسی بہت سی چیزیں ہیں جو دن بھر آپ کے دماغ کو بیدار رکھنے اور کام کے دوران چستی اور توانائی برقرار رکھنے میں معاون ثابت ہوسکتی ہیں۔ لیکن ان چیزوں سے فائدہ تبھی ممکن ہے کہ جب آپ انہیں باقاعدگی کے ساتھ اور مناسب وقت پر استعمال کریں۔ اسی حوالے سے مصنفہ کیلا کانوک کے چند مشورے آپ کے ساتھ شیئر کر رہے ہیں جو سلیکون ویلی میں کام کرتی ہیں۔ ان تجاویز پر عمل کر کے آپ اپنی یاد داشت بہتر بنانے کے ساتھ ذہنی صلاحیتوں میں بھی اضافہ کرسکتے ہیں۔

صبح کا ناشتہ
کبھی بھی اس کا ناغہ نہ کریں۔ یہ وہ پہلا کھانا ہے جو دن کی بہترین شروعات میں آپ کی مدد کرتا ہے۔ اس لیے ناشتہ پر خصوصی توجہ دیں اور اسے محض چائے یا کافی پینے تک محدود نہ کریں۔ کوشش کریں کہ کچھ نہ کچھ ضرور کھائیں۔ ناشتے میں ایک چمچ دہی، تازہ پھلوں کے چند قتلے اور خشک میوہ جات کا استعمال بہت مفید ہے۔ اس کے علاوہ انڈہ بھی کھایا جاسکتا ہے جس سے مختلف وائٹمنز حاصل ہوتے ہیں۔

دوپہر کا کھانا
دن کے وسط میں بازاری کھانوں سے پرہیز کریں اور ہلکی پھلکی غذا لینے کی عادت اپنائیں۔ اس میں آپ مچھلی یا مرغی کے گوشت کو سینڈوچ بنا کر کھا سکتے ہیں۔ یا پھر مختلف سبزیوں اور پھلوں کو یکجا کر کے سلاد کا لطف اٹھا سکتے ہیں۔ اس کے بعد اگر شام کے اوقات میں آپ کو ہلکی پھلکی بھوک لگے تو بادام، اخروٹ کے علاوہ تازہ پھلوں کے جوس سے بھی استفادہ حاصل کرسکتے ہیں۔

رات کا کھانا
کبھی کبھار پیزا، چکن رول، آلو یا پھر تلی ہوئی دیگر چیزیں کھانا ٹھیک ہے مگر روزانہ مرغ مسلم کھانا مناسب نہیں۔ رات میں مچھلی، گیہوں، شکرگندی، ٹماٹر جیسی غذاؤں پر توجہ دینی چاہیے۔ اس کے علاوہ سلاد کے اوپر لیمو چھڑک کر کھانا بھی خاصہ مفید ہے۔ آخر میں اگر کچھ میٹھا کھانے کا دل چاہے تو گہرے رنگوں والی چاکلیٹ سے لطف اٹھایا جاسکتا ہے مگر کیک، ڈونٹس اور دیگر بہت زیادہ مٹھاس والی چیزوں سے پرہیز ہی بہتر ہے۔

loading ads...

Facebook Comments



POST A COMMENT.